You are currently viewing کرپشن کیس :نیب نے سابق وزیر اطلاعا ت سندھ  شرجیل میمن کو گرفتار کر لیا

کرپشن کیس :نیب نے سابق وزیر اطلاعا ت سندھ شرجیل میمن کو گرفتار کر لیا

کراچی (ڈیسک):سابق وزیراطلاعات سندھ شرجیل میمن کو نیب نے گرفتار کرلیا ہے ۔

سابق وزیر اطلاعات سندھ شرجیل میمن کو نیب نے گرفتار کر لیا ہے ۔ سندھ ہائی کورٹ نے محکمہ اطلات میں  5 ارب 76 کروڑ روپے سے زائد  کی کرپشن کے الزام میں سابق  صوبائی وزیر اطلاعات  شرجیل میمن سمیت دیگر 13 افراد  کی عبوری ضمانت کی درخواست  مسترد کر تے ہو ئے انہیں گرفتار کر نے کا حکم دیا تھا۔

سندھ ہائی کورٹ میں چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ جسٹس احمد علی شیخ نے شرجیل میمن سمیت دیگر 13 ملزمان کی جانب سے دائر درخواست ضمانت میں توسیع کی درخواست کی سماعت کی۔اس موقع پر نیب پراسیکیوٹر یاسر صدیق مغل نے شرجیل میمن کی عبوری ضمانت کی توثیق کی مخالفت کی۔دوران سماعت چیف جسٹس سندھ ہائی کورٹ نے شرجیل انعام میمن سمیت 13 ملزمان کی عبوری ضمانت کی توثیق کی درخواست مسترد کردی۔درخواست ضمانت مسترد ہونے کے بعد شرجیل میمن کمرہ عدالت سے باہر آئے اور کچھ دیر بعد وکلا شرجیل میمن کو حصار میں لے کر واپس چیف جسٹس کے کورٹ روم لے گئے۔

 گرفتاری سے بچنے کے لیے شرجیل میمن عدالت کے اندر ہی بیٹھے رہے جب کہ نیب کی ٹیم اور رینجرز اہلکار عدالت کے باہر ان کا انتظار کرتے رہے۔5 گھنٹے سے زائد وقت عدالت میں بیٹھنے کے بعد  بالاخر  شرجیل میمن کو عدالت بند ہونے کی  وجہ سے باہر آنا پڑا ان کو باہر آتے ہی رینجرز اور نیب ٹیم نے گھیرے میں لے لیا ، اس موقع پر ہاتھاپائی اور دھکم پیل بھی ہوئی جس کے دوران شرجیل میمن کی قمیض کے بٹن ٹوٹ گئے اور ان کا گریبان چاک ہوگیا۔شرجیل میمن کی گرفتاری کے وقت صوبائی وزرا بھی احاطہ عدالت میں موجودتھے۔

پیپلز پارٹی کے رہنما شہاب سرکی کے توسط سے عدالت میں درخواست   بھی جمع کرائی گئی  جس میں موقف اختیار کیا گیا  کہ سپریم کورٹ میں اپیل کرنے تک نیب کو گرفتاری سے روکا جائے۔میڈیا سے غیررسمی گفتگو کرتے ہوئے شرجیل میمن نے کہاکہ میں بھاگنے والا نہیں اور عدالت میں موجود ہوں، وکلا سے مشاورت جاری ہے، سابق وزیر اطلاعات سندھ نے کہا کہ ہر قانونی راستہ اختیار کیا جائے گا سندھ ہائیکورٹ کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ سے رجوع کریں گے۔

نیوز پاکستان

Exclusive Information 24/7