You are currently viewing قومی اسمبلی میں سنی اتحاد کونسل کے 88 ارکان دوبارہ آزاد قرار

قومی اسمبلی میں سنی اتحاد کونسل کے 88 ارکان دوبارہ آزاد قرار

اسلام آباد (نیوز ڈیسک) قومی اسمبلی سیکریٹریٹ نے ایوان کے شعبہ قانون کی رپورٹ کی روشنی میں سنی اتحاد کونسل کے 88 ارکان کو دوبارہ آزاد قرار دے دیا۔
اسپیکر ایاز صادق کو قومی اسمبلی لیگل کی رپورٹ میں بتایا گیا کہ سنی اتحاد کونسل پارلیمان میں ایک نشست بھی نہیں رکھتی۔
قومی اسمبلی کے شعبہ قانون کی رپورٹ میں کہا گیا کہ پی ٹی آئی آزاد ارکان کو سنی اتحاد کونسل میں ضم نہیں کیا جاسکتا۔
یاد رہے کہ حکومتی اتحاد کے ممبران کی تعداد 226 ہے۔ قومی اسمبلی میں مسلم لیگ ن کے 122، پاکستان پیپلز پارٹی کے 70، ایم کیو ایم کے 22 ارکان ہیں۔
جمعیت علمائے اسلام کے 11، مسلم لیگ (ق) کے 5، استحکام پاکستان پارٹی کے 4، مسلم لیگ ضیا، بی اے پی اور نیشنل پارٹی کا ایک، ایک رکن ہے۔
قومی اسمبلی میں ایم ڈبلیو ایم، بی این پی اور پشتونخوامیپ کا بھی ایک، ایک رکن ہے۔

Staff Reporter

Rehmat Murad, holds Masters degree in Literature from University of Karachi. He is working as a journalist since 2016 covering national/international politics and crime.