You are currently viewing فاروق ستار نے پارٹی قیادت اور سیاست چھوڑنے کا اعلان کردیا

فاروق ستار نے پارٹی قیادت اور سیاست چھوڑنے کا اعلان کردیا

کراچی (ڈیسک):سربراہ ایم کیو ایم پاکستان ڈاکٹر فاروق ستار نے پی آئی بی میں اپنی رہائشگاہ کے با ہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ایم کیو ایم پاکستان کی قیادت اور سیاست سے دستبردار ہونے کا اعلان کردیا۔

فاروق ستار  نے پارٹی اور سیاست چھوڑنے کا اعلان کرتے  ہوئے کہا کہ ایک طرف آپ کک ماریں اور دوسری طرف کارکنان مخالف ہوجائیں، انہوں نے کہا کہ ایس پی سے اتحاد کے بعد کارکنان کی جانب سے ضمیر فروشی کی باتیں سوشل میڈیا پر کی گئیں ،ایسا نہیں کہ میں نے  پی ایس پی سے اتحاد کا فیصلہ مسلط کردیاسب کو اعتماد میں لیاتھا میں ضمیر فروش نہیں ہوں ۔ایم کیو ایم جانے ،رابطہ کمیٹی جانے ،پی ایس پی جانے اور مصطفی کمال جانیں ۔اب میرا سیاست سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

قبل ازیں پریس کانفرنس کی ابتدا میں فاروق ستار نے کہا کہ میں ملک  کی چوتھی بڑی جماعت کا سربراہ ہوں سینیٹ میں ایم کیو ایم پاکستان تیسری بڑی جماعت ہے ایم کیو ایم پاکستان شہری آبادی کی سب سے بڑی جماعت ہے  انہوں نے کہا اپنے فیصلے کےوجوہات اور محرکات آپ کے سامنے رکھنا چاہتا ہوں ایم کیو ایم نےتمام انتخابات میں نمایاں کامیابی حاصل کی میرا ایک ہی بینک اکاونٹ ہے ۔

ڈاکٹر فاروق ستار نے کل پریس کلب میں   پی ایس پی  کے ساتھ  ہونے والی مشترکہ پریس کانفرنس سے متعلق  کہا کہ کل مہاجروں کے مینڈیٹ کی تذلیل ہوئی ہے ہم مہاجروں کی بقا اور سلامتی کے لیے سیاست کررہے ہیں انہوں نے پی ایس پی  چیئر مین کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ مصطفیٰ کمال نے کل باریک کام کیا پی ایس پی کے سربراہ کے لینڈ کروزر سے متعلق   بیان پر سربراہ ایم کیو ایم نے کہا کہ  میری گاڑی بھی اپنی نہیں ہے جبکہ مصطفیٰ کمال کی لینڈکروزر نئی ہے انہوں نے کہا کہ  مجھے اپنی گاڑی کے سترہ لاکھ روپے اب بھی ادا کرنے ہیں جبکہ مصطفیٰ کمال اور ان  کےساتھ دوسرے رہنما کی گاڑی 3کروڑ سے زیادہ مالیت کی  ہے مجھے علم ہے کہ مصطفیٰ کمال کی گاڑی کہاں سے خریدی گئی  فاروق ستار نے  کہا کہ میری گاڑی کی بلٹ پروفنگ کے 40لاکھ روپےخواجہ سہیل منصورنےدیے جن سے گاڑی خریدی ان بیچاروں نے بھی پلٹ کر نہیں کہا کہ بھائی پیسے کب دیں گے انہوں نے کہا مجھ پر گاڑی کے 17 لاکھ روپے قرض ہے جو  میں نے ابھی بھی دینے ہیں۔

 سربراہ ایم کیو ایم نے کہا کہ اب مصطفیٰ کمال اپنی گاڑی کا حساب دیں،انکے پاس سوا تین کروڑ روپے کی گاڑی کہاں سے آئی مصطفیٰ کمال نے پارٹی کے دیے گھرکی رقم نہیں لوٹائی مصطفیٰ کمال بتائیں خیابان سحر کا گھر ،آفس کیسے آیا ؟انہوں نے کہا کہ میں نے سرکاری پوزیشن  پر ہوتےہوئےاختیارات سے تجاوزنہیں کیا ۔

ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا کہ 1992کے آپریشن کے بعد بھاگ کر نہیں گیا ملک میں ہی رہا خود پر ایک بھی مقدمہ این آر او سے ختم نہیں کرایا ،عدالتوں میں سامناکیا میں  انہوں نے کہا میں جس سیل میں تھا اس میں تین طرف دیواریں ایک طرف دروازہ تھا ،میرے سیاسی سفرمیں یہ اہم دن ہے ، کراچی ہو یا پاکستان انجینیرز سیاست نہیں چل سکتی انہوں نے کہا  ہم پاکستان زندہ باد کے نعرے کے ساتھ کھڑے ہوئے۔

اس موقع پر  فاروق ستار نے شعر بھی پڑھا :

اوقات نہیں ہے آنکھ سے آنکھ ملانے کی

 دعویٰ کررہا ہے نادان نام مٹانے کی

ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا کہ مصطفیٰ کمال کے رفقا ایم کیو ایم کو دفن کرنے کی بات کر رہے ہیں مصطفی ٰ کمال نے کہا ایم کیو ایم کا نام ختم ہونا چاہیے انہوں نے کہا کہ  مینڈیٹ رکھنےوالی پارٹی کو دفن کرنے کا دعویٰ کیسے کرسکتے ہیں مفاہمت اور سیاسی اتحاد کا فیصلہ دیرپا امن کے لیے کیا، مفاہمت اور اتحاد کا مقصد مظلوموں کے ووٹ بینک تقسیم ہونے سے بچانا تھا  سربراہ ایم کیو ایم پاکستان نے کہا کہ اس جماعت سے کیسے اتحاد ہوسکتا ہے جو مہاجروں کا گردانتی ہی نہیں مہاجر عوام کل سے دل گرفتہ ہیں کل جو مہاجروں کی دل آزاری ہوئی ہے اس سے پہلے نہیں ہوئی ۔

مصطفیٰ کمال کے کل  کے بیان پر انہوں نے کہا کہ عمل قومی ہونا چاہیے،قومی لبادہ اوڑھنے سے قومی نہیں ہوجاتے کراچی میں پاکستان کی بقا کی جنگ لڑ رہے ہیں  فاروق ستار نے کہا کہ پاکستان کی خاطر جانوں کی قربانی دینے والے سے اپنا تعلق کیسے ختم کریں؟انہوں نے پی ایس پی کو چیلنج کرتے ہوئے کہا کہ  تم لاہور یا پشاور سے جیت گئے تو ایم کیو ایم کاجھنڈا  ہم خود  ہی دفن کردیں گے۔

نیوز پاکستان

Exclusive Information 24/7