You are currently viewing دوران عدت نکاح کیس: عمران، بشریٰ کو 7، 7 سال قید وجرمانہ

دوران عدت نکاح کیس: عمران، بشریٰ کو 7، 7 سال قید وجرمانہ

راولپنڈی (نیوز ڈیسک) عمران خان اور بشریٰ بی بی کو عدت میں نکاح کے کیس میں 7،7 سال قید اور 5،5 لاکھ روپے جرمانے کی سزا سنادی گئی۔
اڈیالہ جیل میں سینئر سول جج قدرت اللہ نے دوران عدت نکاح کیس میں عمران خان اور بشریٰ بی بی کی موجودگی میں کیس کا فیصلہ سنایا۔
گزشتہ روز تقریباً 14 گھنٹے کی طویل سماعت کے بعد جج قدرت اللہ نے عدت میں نکاح سے متعلق کیس کا فیصلہ محفوظ کیا تھا۔
یاد رہے کہ مقدمے کے درخواست گزار بشریٰ بی بی کے سابق شوہر خاور مانیکا نے عمران خان اور بشری بی بی پر عدت کے دوران نکاح کا مقدمہ دائر کیا تھا۔
عمران خان اور بشریٰ بی بی کے خلاف عدت میں نکاح سے متعلق کیس میں بشریٰ بی بی کے سابق شوہر خاور مانیکا، ان کے ملازم لطیف، مفتی سعید اور نکاح کے گواہ عون چوہدری سمیت دیگر گواہان کے بیانات قلمبند کیے گئے تھے۔
گزشتہ روز عمران خان اور بشریٰ بی بی نے 342 کا بیان ریکارڈ کرایا تھا جبکہ عمران خان اور بشریٰ بی بی کے وکیل سلمان اکرم راجا نے گواہان خاور مانیکا، مفتی سعید، عون چوہدری اور ملازم محمدلطیف پرجرح کی تھی۔
یاد رہے کہ قبل ازیں عمران خان اور بشریٰ بی بی کو توشہ خانہ کیس میں 14، 14 برس قید جبکہ سائفر کیس میں عمران خان کو 10 برس کی قید بامشقت کی سزا سنائی جاچکی ہے۔

Staff Reporter

Rehmat Murad, holds Masters degree in Literature from University of Karachi. He is working as a journalist since 2016 covering national/international politics and crime.