You are currently viewing جامشورو: مہران یونیورسٹی میں طالبات کو ہراساں کیے جانے کا انکشاف

جامشورو: مہران یونیورسٹی میں طالبات کو ہراساں کیے جانے کا انکشاف

جامشورو (نیوز ڈیسک) مہران یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی جامشورو میں طالبات کو ہراساں کیے جانے کا انکشاف ہوا ہے۔
طالبات کو ہراساں کرنے کے الزام میں انفارمشن ٹیکنالوجی شعبے کے سینئر اسسٹنٹ کو معطل کرکے تحقیقات شروع کردی گئیں ہیں۔
مہران یونیورسٹی انتظامیہ کے مطابق طالبات کی تحریری شکایت پر وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر طحہٰ حسین نے تین رکنی اینٹی ہراسمنٹ کمیٹی تشکیل دے دی۔
سینئر آئی ٹی اسسٹنٹ پر طالبات کو ہراساں کرنے کے سنگین الزامات عائد کیے گئے ہیں جس پر اینٹی ہراسمنٹ کمیٹی کی سفارش اور سنڈیکیٹ چیئرمین کے حکم پر رجسٹرار نے سینئر آئی ٹی اسسٹنٹ کی معطلی کا نوٹیفکیشن جاری کردیا۔
یونیورسٹی حکام کے مطابق اینٹی ہراسمنٹ کمیٹی نے شکایت کنندہ طالبات کے بیانات قلمبند کرنے کے علاوہ ثبوت بھی جمع کرلیے ہیں جبکہ معطل اسسٹنٹ کا بیان بھی قلمبند کیا جائے گا۔

Staff Reporter

Rehmat Murad, holds Masters degree in Literature from University of Karachi. He is working as a journalist since 2016 covering national/international politics and crime.