You are currently viewing بینک سے 50ہزار سے زائد نکلوانے والے نان فائلرز 0.6 فیصد ٹیکس ادا کرینگے

بینک سے 50ہزار سے زائد نکلوانے والے نان فائلرز 0.6 فیصد ٹیکس ادا کرینگے

اسلام آباد (ڈیسک) حکومت نے نئے مالی سال کے بجٹ میں بینک سے 50 ہزار سے زائد نکلوانے پر 0.6 فیصد ٹیکس عائد کر دیا۔
گویا نان فائلرز بینک سے اپنی رقم نکلوانے پر ایک لاکھ روپے پر 600روپے ادا کرنے کے پابند ہوں گے، دوسری جانب فائلر پر ود ہولڈنگ ٹیکس کی شرح ایک فیصد سے بڑھا کر پانچ فیصد کرنے کی تجویز جبکہ نان فائلر پر یہ شرح دس فیصد کرنے کی تجویز دی گئی ہے اور امیر طبقے پر سپر ٹیکس عائد کرنے کی تجویزبھی بجٹ میں شامل کی گئی ہے۔
بجٹ میں ٹیکس وصولیوں کو یقینی بنانے کے لیے حکومت نے نان فائلرز کے لیے گھیرا مزید تنگ کر دیا، کمرشل درآمدات پر ٹیکس ریٹ میں 0.50 فیصد اضافہ کی تجویزدی گئی ہے۔
بجٹ میں نان فائلرز کے لیے لیدر اور ٹیکسٹائل کی مصنوعات کی شرح بارہ فیصد سے بڑھا کر پندرہ فیصد کرنے کی تجویز دی گئی جو قیمتی ملبوسات اور مصنوعات پر عائد کیا جائے گا، جس سے عام آدمی متاثر نہیں ہو گا۔