You are currently viewing امریکی سپریم کورٹ میں پہلی بار سیاہ فام خاتون جج

امریکی سپریم کورٹ میں پہلی بار سیاہ فام خاتون جج

  • Post author:
  • Post category:دنیا
  • Post last modified:08/04/2022 12:24
  • Reading time:1 mins read

واشنگٹن (ڈیسک)امریکی سپریم کورٹ میں 233 سالوں میں پہلی بار سیاہ فام خاتون نے جگہ بنا کر تاریخ رقم کردی۔ فرانسیسی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی سینیٹ نے پہلی سیاہ فام خاتون کے طور پر کیتن جی بران جیکسن کی سپریم کورٹ میں خدمات انجام دینے کی توثیق کر دی ہے جنہوں نے سینٹ کے 53اراکین میں سے 47ووٹ حاصل کیے ، کیتن جی بران جیکسن 6-3قدامت پسند اکثریت کے ساتھ عدالت کے لبرل بلاک میں 83سالہ بریر کی جگہ لیں گی، بریئر کی عدالت کی موجودہ مدت جون کے آخر میں ختم ہو جائے گی جس کے بعد کیتن جی بران جیکسن باضابطہ طور پر حلف اٹھائیں گی۔ امریکی صدر جو بائیڈن نے اسے اپنی قوم کے لیے ایک تاریخی لمحہ قرار دیا ہے۔ ڈیموکریٹک سینیٹ کے اکثریتی راہنما چک شومر نے کہا کہ یہ سنگ میل نسلوں پہلے ہونا چاہیے تھا،لیکن ہم ہمیشہ ایک زیادہ پرفیکٹ یونین کی طرف بڑھ رہے ہیں، اس کے باوجود امریکا آج ہماری یونین کو مزید پرفیکٹ بنانے کی طرف ایک بڑا قدم اٹھا رہا ہے۔ یاد رہے کہ جیکسن اپنے کیریئر کے شروع میں بریئر کے لیے سپریم کورٹ کے کلرک کی حیثیت سے خدمات سر انجام دے چکی ہیں۔